باپ بیٹی کی یہ لازوال محبت کی حیرت انگیز کہانی ہے

اس فوٹو کو دیکھ کر آپ ہر ایک کے دماغ میں کچھ عجیب قسم کے خیالات آرہے ہوں گی، لیکن اس فوٹو کی سچائی کو جاننے کے بعد آپ کی آنکھوں میں بھی آنسو آ جائیں گے …!
یہ فوٹو یورپ کے ایک مشہور پینٹر “Murillo” نے بنائی تھی! یورپ کے ایک ملک میں ایک شخص کو بھوک سے تڑپ تڑپ کر مرجانے کی سزا دے کر جیل میں بند کر دیا گیا، یہ سزا اُس زمانے میں سب سے زیادہ سخت تھی کیوں کہ سزا یافتہ انسان کو بھوک اور پیاس سے تڑپا تڑپا کر مرنے کے لئے چھوڑ دیا جاتا تھا اور جب وہ مرے تو وہ شدید بھوکا اور پیاسا ہونا چاہیے! اس کی بیٹی نے حکومت وقت سے درخواست کی کہ اُسے اپنے والد سے ہر روز ملاقات کرنے کی اجازت دی جائے اور حکومت وقت نے اُس کو اپنے والد سے روزانہ ملنے کی اجازت دے دی لیکن اُس کی ملاقات سے پہلے اُس کی روزانہ سخت تلاشی لی جاتی تھی کہ کہیں وہ کھانے پینے کی کوئی چیز اندر نہ لے جاسکے. اس نے ملاقات کے وقت اپنے والد کی حالت کو دیکھا تو وہ بہت پریشان ہوگئی کیونکہ اُس کا والد پانی اور بھوک کی شدد کی وجہ سے تڑپ رہا تھا۔۔۔! اس نے ایک فیصلہ کیا کہ وہ اپنے والد کو ایسے پڑتی موت مرنے نہیں دے گی اور اُس نے اپنے والد کو زندہ رکھنے کے لئے اپنا دودھ پلانا شروع کر دیا۔۔۔! جب شخص بہت دنوں کے بعد بھی نہیں مرا تو گارڈز کو اِس لڑکی پر شق ہوا اور اُنہوں نے اِس مشکوک لڑکی کی چانچ پڑتال کرنا شروع کر دیا اور ایک دن انہوں نے اُس لڑکی کو اپنا دودھ اُس آدمی کو پلاتے ہوئے پکڑ لیا۔ پھر اس لڑکی پر مقدمہ کیا گیا اور حکومت وقت کے قانون کے مطابق اُس لڑکی کو بھی یہی سزا ملنی چاہئے تھی لیکن جو جج صاحباں نے اِس مقدمے کا فیصلہ کیا وہ عجیب اور جذبات سے بھرپور تھا اُنہوں نے اِس لڑکی کو اور اُس کے والد کو آزاد کر دیا۔
عورت چاہے کسی بھی روپ میں ہو ماں، بیوی، بہن یا بیٹی وہ ہر روپ میں، ممتا کی مورت ہے اور قربانی دیتی ہے.
نوٹ: یہ پینٹنگ آج بھی یورپ میں سب سے زیادہ مہنگی پینٹنگ ہے … !!

اپنا تبصرہ بھیجیں