حرام تعلقات کے بجائے نکاح ، 18 سال کی عمر میں شادی کرنیوالے نمرہ اور اسد نے نوجوانوں کیلئے عمدہ مثال قائم کردی

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک)سوشل میڈیا پر ایک شادی شدہ جوڑے کی تصاویر زیر گردش ہیں جو ہر طرف چھائی ہوئی ہیں،تصاویر وائرل ہونے کی وجہ شادی کے بندھن میں بندھنے والے جوڑے کی عمریں اور ان کی معصومیت ہے۔ معلوم ہوا ہے کہ دلہن کا نام نمرہ اور دلہے کا نام اسد ہے جنہوں نے حال ہی میں شادی کی ہے۔دولہے کی بہن نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر جوڑے کی تصاویرشیئرکرتے ہوئے کہا کہ میرے بھائی اسد نے والد صاحب کو ایک لڑکی کے بارے میں بتایا کہ وہ اس سے شادی کرنا چاہتا ہے۔والد نے لڑکی کے گھر جا کر رشتہ مانگ لیا اور ایک سال بعد دونوں کی شادی ہو گئی۔دولہے کی بہن کا مزید کہنا ہے کہ میرے بھائی اوربھابھی شادی کے بعد بہت خوش ہیں اور وہ اپنی تعلیم بھی جاری رکھیں گے۔دونوں عمان منتقل ہو جائیں گے جہاں وہ اپنی پڑھائی جاری رکھیں گے۔سوشل میڈیاپرنوبیاہتے جوڑے کی تصاویر وائرل ہونے کے بعد ٹویٹر پر’ ’نکاح‘ ‘ٹاپ ٹرینڈ بن چکا ہے

اپنا تبصرہ بھیجیں