مجھے سلمان تاثیر نہ بنایا جائے ‘‘امیر معاویہؓ کے متعلق متنازعہ بیان ۔۔۔ شہلا رضا نے حیران کُن وضاحت پیش کر دی

کراچی(نیوز ڈیسک ) وزیربرائے حقوقِ نسواں سندھ سیدہ شہلا رضا نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ امیر معاویہؓ کے بارے میں اپنے بیان پر قائم ہیں۔ انہوں نے گزشتہ روز ایک نجی ٹی وی شو میں حضرت محمد ﷺ کے قریبی ساتھی اور پانچویں خلیفہ حضرت امیر معاویہؓ کے

حوالے سے توہین آمیز بیان دیا تھا جس کے بعد ان پر شدید تنقید کی جا رہی ہے۔شہلا رضا نے پروگرام کے دوران کہا تھا کہ ’عمران خان کہتے ہیں کہ معاویہ کا قرضہ ہے اس لیے انہیں حکومت چاہیے، حالانکہ تاریخ میں معاویہ کے قرضے کا کوئی ذکر نہیں ہے‘۔ اس حوالے سے انہوں نے مزید قابلِ اعتراض بیان بھی دیا جس کے بعد ان کے خلاف شدید تنقید شروع ہو گئی ہے اور عوام نے سیدہ شہلا رضا کو وزیربرائے حقوقِ نسواں سندھ کے عہدے سے ہٹانے کا مطالبہ بھی کیا ہے۔سیدہ شہلا رضا نے اس حوالے سے میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ اپنے بیان پر قائم ہیں اور انہیں سلمان تاثیر نہ بنایا جائے۔ شہلا رضا نے کہا ہے کہ جب انہوں نے جب عمران خان کاذکر کیا تو معاویہ کہا اور اس کے بعد حضرت معاویہؓ کہا۔ تاہم ان کے گزشتہ روز کے بیان میں عظیم اسلامی ہستی کی توہین موجود تھی جس پر ان کے خلاف شدید تنقید کی جارہی ہے اور ان کے خلاف مہم کا آغاز کر دیا گیا ہے کہ انہیں وزیربرائے حقوقِ نسواں سندھ کے عہدے سے ہٹایا جائے۔ شہلا رضا پر شدید تنقید کا سلسلہ جاری ہے ، پوری قوم کا مطالبہ ہے کہ انہیں عہدے سے ہٹا دیا جائے،

اپنا تبصرہ بھیجیں