نہ زمین پھٹی نہ آسمان گرا، سعودیہ پلٹ اوباش نوجوان کی 14سالہ گونگی بہری اور ٹانگوں سے معذور بچی کے ساتھ زبردستی زیادتی،ہوس کا انسانیت سوز واقع

سانگلہ ہل (آن لائن) سانگلہ ہل سعودیہ پلٹ اوباش نوجوان کی 14سالہ گونگی بہری اور معذور بچی کے ساتھ گھر میں زیادتی بچی آمنہ خون میں لت پت ملزم فرار آمنہ کے شور مچانے پر ہمسائیوں نے موقع پر آکر پولیس بلالی پولیس نے تشویشناک حالت میں بچی آمنہ کو ہسپتال منتقل کر دیامتاثرہ بچی آمنہ گھر میں اکیلی تھی کہ اوباش ملزم محمد بوٹا بلوچ نے گھر میں داخل ہوکر آمنہ کو زبردستی زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا متاثرہ بچی نے اوباش ملزم بوٹا بلوچ کو تصویر دیکھ کر شناخت کر لی ا شاروں کنایوں سے بچی نے اپنے ساتھ ہونے والی زیادتی کی تصدیق کر دی واقع پر اہل محلہ سراپا احتجاج جبکہ اس کی اطلاع ملنے پر ڈی پی او ننکانہ صاحب اسماعیل الرحمٰن کھاڑک،چیف ایگزیکٹو آفیسر(ہیلتھ)ڈاکٹر شکیل احمد،ڈپٹی ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسر و ایم ایس ڈاکٹر طاہر،ڈی ایس پی سانگلہ ہل شبیر احمد اعوان اور ایس ایچ او سٹی سانگلہ ہل وصی احمد شاہ ٹی ایچ کیو ہسپتال سانگلہ ہل پہنچ گئے۔تفصیل کے مطابق سانگلہ ہل کی طارق آباد کالونی المعروف(مچھر کالونی)میں محنت کش محمد عارف کی 14سالہ گونگی بہری اور ٹانگوں سے معذور بیٹی آمنہ اپنے گھر میں اکیلی تھی اس کی والدہ فضیلت بی بی ضروری کام سے گھر سے باہر گئی ہوئی تھی اس دوران سعودیہ پلٹ2بچوں کاباپ اوباش نوجوان محمد بوٹا بلوچ گھر میں اکیلی بچی آمنہ کو دیکھ کر اس موقع سے فائدہ اٹھاتے ہوئے گھر میں داخل ہوگیا اور اس نے بچی آمنہ کو قابو کر کے زبر دستی زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا بچی کے خون میں لت پت ہونے اور حالت غیر ہونے پر برہنہ حالت میں چھوڑ کر فرار ہو گیا متاثرہ بچی آمنہ کے شور مچانے پر ہمسائے موقع پر پہنچ گئے انہوں نے موبائل فون پر اطلاع دے کر پولیس بلالی 1122ریسکیو عملہ نے جائے وقوعہ پر پہنچ کر انتہائی نازک حالت میں بچی آمنہ کو ٹی ایچ کیو ہسپتال منتقل کردیا بچی کے وارثان والدین اور اہل محلہ بھی ہسپتال پہنچ گئے ضلعی افسران ننکانہ صاحب اور مقامی پولیس انتظامیہ نے ہسپتال میں آنے والے بچی کے والدین اور اہل علاقہ سے واقع کے متعلق پوچھ گچھ شروع کردی متاثرہ گونگی بہری اور معذور بچی نے اپنی والدہ کو اشاروں میں بتایا جس پر ملزم کی تصویریں بچی کو دکھائیں تو آمنہ نے روتے ہوئے ملزم کو شناخت کر لیا اور اپنے ساتھ ہونیوالی زیادتی کی تصدیق بھی کر دی تھانہ سٹی پولیس نے ملزم کی گرفتاری کیلئے ٹیمیں تشکیل دے دیں تا حال ملزم گرفتار نہ ہو سکا واضح رہے کہ اوباش ملزم بوٹا بلوچ اپنے بیوی بچوں کے ساتھ متاثرہ بچی آمنہ کے گھر کے قریب ہی رہتا ہے اور ملزم کا آمنہ کی گلی میں اکثر آنا جانا رہتا تھاڈی پی او ننکانہ صاحب اسماعیل الرحمٰن کھاڑک نے میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے فوری طور پر انصاف کی فراہمی اور ملزم کی گرفتاری کی یقین دہانی کروائی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں