پاکستان محض ایک زمین کا ٹکڑا نہیں بلکہ اللہ کی ایک مقدس امانت بھی ہے جو ہمیں سونپی گئ ہے اور اس کی حفاظت و بقا کا ذمہ دار ہر پاکستانی شہری ہے ۔

تحریر عروبہ عدنان
پاکستان محض ایک زمین کا ٹکڑا نہیں بلکہ اللہ کی ایک مقدس امانت بھی ہے جو ہمیں سونپی گئ ہے اور اس کی حفاظت و بقا کا ذمہ دار ہر پاکستانی شہری ہے ۔ جو شخص اس امانت میں خیانت کرے گا وہ اللہ کی پکڑ سے بچ نہیں سکے گا ۔کیونکہ پاکستان کا حامی و ناصر خود اللہ ہے اس کی واضح مثال اب تک کے حالات ہیں ۔ عالمِ کفر نے ہر طریقے سے اس ملک کو توڑنے بلکہ ختم کرنے کی کوشش کی ۔ ان خارجی ملک دشمن عناصر نے تقریبا سولہ سال تک دہشت گردوں کی صورت میں ہمارے ملک کو تباہ و برباد کرنے کا ناپاک ارادہ کیا ۔ مگر الحمدللہ پاکستان کی عوام اور پاکستانی فوج نے مل کر ان دہشت گردوں کا مقابلہ کیا اور ملک کو ان دہشت گردوں سے پاک کر دیا ۔ اس سلسلے میں پاکستان کے محبِ وطن شہریوں نے بے انتہاء جانی و مالی قربانیاں دیں اور ملک و قوم کے لیے متحد اور ثابت قدم رہے اور دشمنانِ اسلام کے سامنے اپنی فوج کی ساتھ شانہ با شانہ کھڑے رہے یوں ملک کو ایمانی طاقت سے ان دہشت گردوں سے نجات دلائ ۔ پاکستان واحد مسلم مملکت ہے جس پہ یہ صیہونی غیر مسلم سازشی طاقتیں اب تک ہر طرح ناکام ہوئ ہیں انہیں نظریاتی ،اخلاقی ،تہزیبی اور عسکری ہر ہر محاذ پہ شکستِ فاش ہوئ ہے اور ان شاءاللہ ہمیشہ اسی طرح شکستِ فاش ہی ہو گی ۔ یہ پاک سرزمین 27 رمضان کی بابرکت رات کو معرض وجود میں آیا ۔۔۔ یہ وہ ریاست ہے جس کے متعلق بانی ء پاکستان قائدِاعظم محمد علی جناح نے کہا تھا کہ ” میرا ایمان ہے کہ پاکستان ہرگز وجود میں نہیں آ سکتا تھا ۔جب تک کہ اس میں فیضانِ نبویؐ شامل نہ ہوتا اور اب آنے والی نسلوں کی ذمہ داری ہے کہ اس کو خلافتِ راشدہ کی بنیاد پہ تعمیر کریں تاکہ اللہ نے جو وعدے ان سے کئے ہیں اللہ وہ وعدے پورا کرے “.
یہ زمیں مقدس ہے ،ماں کے پیار کی صورت
اس وطن میں تم سب ہو،برگ وبار کی صورت
دیکھنا گنوانا مت دولت یقین لوگوں
یہ وطن امانت ہے ،اور تم امیں لوگوں
ہم سب پہ فرض ہے کہ ہم اپنے ملک کی تعمیر و ترقی میں اپنا کردار پوری ایمانداری ۔ جانفشانی اور فرض سمجھ کر ادا کریں اور جب کبھی ملک مشکل حالات کا شکار ہو تو حکومتِ وقت اور فوج کے ساتھ مل کر ملک کو مشکل حالات سے باہر نکالیں ۔.۔ ہم اپنے رب کا جتنا بھی شکر ادا کریں وہ کم ہے کہ اس نے ہمیں دنیا کی بہترین فوج سے نوازا جو جزبہءایمانی سے لبریز ہے اور ملک کو قوم کےلیے ہر قسم کی قربانی دینے کےلیے ہر دم تیار رہتی ہے۔ دہشت گردوں سے نبٹنے کے لیے پاک آرمی نے بہت بڑے بڑے کامیاب آپریشن کئے ہیں جن میں ضربِ عضب ،آپریشن راہِ راست اور بلیک تھنڈر قابلِ ذکر ہیں ۔ اس وقت پاک فوج دنیا کی سب سے کم پیسے لینے والی فوج ہے ۔ اس ضمن میں امریکہ اپنی فوج پہ سالانہ 409,596 ڈالر خرچ کرتا ہے ،چین ۔92،456 ڈالر ,انڈیا ۔۔42,188 ڈالر اور اسرائیل ۔۔۔ 100,849 ڈالر سالانہ خرچ کرتا ہے جبکہ پاکستان صرف 13,513 ڈالرز سالانہ خرچ کرتا ہے ۔ اس کے باوجود ہماری فوج دنیا کی سب سے بہادر اور بہترین فوج ہے ۔ جس پہ ہمیں بجا طور پر فخر ہے ۔ پاک فوج کا ہر جوان ہمیشہ اپنے وطن کے لیے ہر طرح کی قربانی دینے کو ہردم تیار رہتا ہے اور وہ ایک اللہ پہ یقین رکھتے ہوئے موت سے بالکل نہیں ڈرتا ۔ بلکہ شہادت کی شدید خواہش رکھتا اپنے دل میں رکھتا ہے ۔یہی جزبہ ء ایمانی اسے دوسری غیر اسلامی افواج سے ممتاز بناتی ہے ۔

شہادت ہے مطلوب و مقصودِمومن
نہ مالِ غنیمت نہ کشور کشائ ۔
کسی بھی ملک کا دفاع دیدہ و نادیدہ قوت پہ منحصر ہے بیشک کفار کے پاس بے انتہاہ دیدہ قوت موجود ہے لیکن وہ نادیدہ قوت اس کے پاس موجود نہیں جو ہماری پاک فوج کے پاس موجود ہے اور نادیدہ قوت جزبہ ء ایمانی ہے ۔ہماری فوج کا ہر بندہ اس جزبہ ء ایمانی سے مالامال ہے اسی وجہ سے وہ اپنے سے 10 گناہ بڑی فوج سے بھی ٹکرانے سے نہیں ڈرتے جس کی ایک بڑی مثال 1965 کی اور 1999 کی کارگل جنگ ہے ۔ سرحدوں کی حفاظت کے علاوہ پاک فوج نے ملک میں کسی بھی قسم کی اندرونی و بیرونی ہنگامی صورت حال کو کنٹرول کرنے اور نبٹنے میں بھی اہم کردار ادا کیا ہے ۔ اندرونی خلفشار ہو یا زلزلہ، ،سیلاب ہو یا کوئ اور ناگہانی آفت پاک فوج ہمیشہ ملک وقوم کی خدمت کے لیے پیش پیش رہی ہے . بین الاقوامی سطح پہ بھی پاک فوج کی کارکردگی انتہائ متاثر کن رہی ہے ۔ جس کی چند اہم مثالیں پیشِ خدمت ہیں ۔
1_1948 میں جیسے ہی پہلی عرب اسرائیل جنگ چھڑی پاکستان نے چیکو سلاویہ سے ڈھائ لاکھ رائفلیں خرید کر عربوں کو دیں اور تین جنگی جہاز اٹلی سے خرید کر مصر کے حوالے کئے تاکہ وہ اسرائیل کے حملوں سے اپنا دفاع کر سکیں ۔
2_پاک فوج نے 1967 اور 1973 کی عرب اسرائیل جنگوں میں عربوں کی مدد کی اور نا صرف اسرائیل کی پیش قدمی روکی بلکہ 20 کے قریب اسرائیلی جہاز مار گرائے ۔
3_جب اسرائیل نے ترکی کے امدادی جہاز پہ گولہ باری کی تو سب سے پہلے پاکستان کے جنگی ہیلی کاپٹر ترکی کی مدد کو پہنچے اور ترکی کی سرحدوں کی حفاظت کی ۔
4_پاکستانی فوج نے اسرائلی حملے کے خلاف مصر کی مدد کی جس کی وجہ سے اسرائیلی افواج وادیء سینا کے قریب رک گئ اور وہ مزید آگے نہ بڑھ سکے ۔
5_پاک آرمی نے 1980 میں روس جیسی سپر پاور طاقت سے ٹکر لی اور افغانستان کی مدد کی اور روس کو شکست دی جس کے نتیجے میں روس کے ٹکڑے ہو گئے ۔
6_پاک آرمی نے 1992 اور 1993 میں یورپ کے خلاف اس وقت بوسنیا کی مدد کی جب تمام مسلم ممالک نے چپ کا روزہ رکھا ہوا تھا ۔ پاکستان نے بوسنیا کی ناصرف سفارتی سطح پہ مدد کی بلکہ پاک فوج عملاً بوسنیا لڑنے بھی گئ ۔
7_افواجِ پاکستان نے آرمینیا کے خلاف مظلوم آذر بائ جان کی مدد کی ۔پاکستان دنیا کا واحد ملک ہے جس نے اب تک آرمینیا کو تسلیم نہیں کیا ۔
8_پاک آرمی نے ایران عراق جنگ رکوانے میں اہم کردار ادا کیا ۔
9_پاکستانی افواج نے ایران میں دہشت گردی کرنے والی تنظیم “جند اللہ” کے سربراہ کو گرفتار کرنے میں ایران کی مدد کی ۔
10_پاک آرمی نے 1965 کی جنگ میں اپنے سے پانچ گنا بڑے بھارت کو شکست دی ۔
پاک فوج نے مجاہدین کے ساتھ مل کر ایک تہائ کشمیر آزاد کرا لیا ۔
11_کارگل کی جنگ میں پاک فوج نے چند ہزار فوجیوں کی مدد سے انڈیا کی سپلائ روک کر 7لاکھ انڈین فورس کو محصور کر دیا جو کہ ایک ورلڈ ریکارڈ ہے یہی نہیں بلکہ کارگل کی جنگ میں انڈیا کے 700 فوجی اور تین جنگی جہاز مار گرائے نیز کئ کلومیٹر تک انڈین علاقوں پہ بھی قبضہ کر لیا ۔ اگر سیاسی شخصیات بیچ میں نہ آتی تو پاکستان انڈیا کے کئ علاقوں پہ اپنی اجارہ داری قائم کر چکا ہوتا ۔
12_پاک افواج نے خانہ کعبہ کو دہشت گردوں کے قبضے سے آزاد کروایا ۔
13_پاک فوج نے 1991 میں کویت کی عراق کے خلاف مدد کی ۔
14_لبریشن ٹائگرز نامی تنظیم سے سری لنکا کی جان پاک فوج نے چھڑوائ اور اس دہشت گرد تنظیم کو ختم کیا ۔
15_1993 میں زمباوے جب تنہاہ رہ گیا تھا تو پاکستان نے پاک آرمی کے ذریعے زمباوے کی مدد کی ۔
16_ 1993 میں جب امریکی فوج کی ایک بڑی تعداد صومالی جنگجووں کے گھیرے میں آ گئ تو وہ امن کمیشن میں موجود پاک فوجیوں کے ایک مختصر سے دستے نے امریکی فوجیوں کو چھڑوایا ۔
17_پاکستان کی پاک فوج اقوام متحدہ کے لیے دنیا بھر میں امن فوج بھیجنے میں تیسرے نمبر پہ ہے ۔
18_مزائیل کی دوڑ میں امریکہ ،چین کے بعد پاکستان تیسرا بڑا ملک ہے جس کا سہرا بھی پاک فوج کے سر ہے ۔ پاک فوج بری ہو ،بحری ہو یا فضائ اس کی تاریخ جنگی کارناموں سے بھری پڑی ہے اور پاکستان کا ہر شہری اپنی اس بہادر فوج پر مکمل بھروسہ ،یقین اور فخر کرتا ہے اور ان شاءاللہ کرتا رہے گا ۔
یہ غازی یہ تیرے پراسرار بندے
جنھیں تو نے بخشا ہے ذوقِ خدائ
دو نیم ان کی ٹھوکر سے صحرا و دریا
سمٹ کر پہاڑ ان کی ہیبت سے رائ
پاک فوج زندہ باد

اپنا تبصرہ بھیجیں