کبھی بھی ڈیل نہیں کروں گا۔قانونی جنگ لڑوں گا۔ نواز شریف پی ٹی آئی حکومت جلد اپنے انجام کو پہنچنے والی ہے، میں ابھی بھی ووٹ کو عزت دو کی بات پر قائم ہوں۔ سابق وزیراعظم نواز شریف کا جیل میں شہباز شریف سے مکالمہ

آج کوٹ لکھپت جیل میں سابق وزیراعظم نواز شریف سے ملاقات کا دن تھا۔میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ 13 اگست کے بعد پہلی بار شہباز شریف اور نواز شریف کے مابین ملاقات ہوئی۔دونوں بھائیوں کے مابین ملاقات ایک گھنٹے تک جاری رہی۔ممکنہ ڈیل کی خبروں پر بھی نواز شریف اور شہباز شریف کے درمیان مکالمہ ہوا۔نواز شریف نے کسی بھی قسم کی ڈیل کی خبروں کو مسترد کر دیا۔نواز شریف نے کہا کہ کبھی بھی ڈیل نہیں کروں گا۔قانونی جنگ لڑوں گا،نواز شریف نے کہا کہ ابھی بھی ووٹ کو عزت دو کی بات پر قائم ہوں۔نواز شریف نے مزید کہا کہ ہمیں این آر او کا طعنہ دینے والے جلد عوام سے این آر او مانگیں گے۔پی ٹی آئی حکومت جلد اپنے انجام کو پہنچنے والی ہے۔عوام عمران خان اور کابینہ کا احتساب کرے گی۔
نواز شریف نے مسئلہ کشمیر پر کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں بھارت ظلم کر رہا ہے۔دنیا مسئلے کو حل کروائے۔انہوں نے کہا کہ مسئلہ کشمیر پر دنیا کو جاگنا ہو گا۔واضح رہے کہ گذشتہ کچھ دنوں سے ڈیل کی خبریں زور پکڑ گئی ہیں۔ خیال رہے کہ گذشتہ کچھ دنوں سے شریف خاندان کی ڈیل کی خبریں زور پکڑ رہی ہیں ، کئی صحافیوں یہاں تک کہ حکومتی نمائندوں نے بھی ڈیل سے متعلق کئی دعوے کیے ہیں جبکہ اب جاوید ہاشمی نے بھی ڈیل کی خبروں کا اشارہ دے دیا ہے۔
اسی حوالے سے مسلم لیگ ن کے رہنما اور سینئیر سیاستدان مخدوم جاوید ہاشمی نے کہا کہ خبریں آرہی ہیں کہ ڈیل ہو رہی ہے لیکن قائد مسلم لیگ ن نواز شریف کا واضح مؤقف ہے کہ وہ این آر او نہیں لیں گے۔ انہوں نے کہا کہ این آر او دینے کی عمران خان کے پاس کوئی قانونی حیثیت نہیں ہے۔ ہم وزیراعظم عمران خان کے پاس نہیں جائیں گے اور یہ بات طے ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں